Type Here to Get Search Results !

Jeb khali hai magar shauq nawabo wala

Views 0

Also Read

بھوک میں خواب بھی دکھتا ہے کبابوں والا
جیب خالی ہے مگر شوق نوابوں والا

اب کے محبوب ملا اتنا حجابوں والا
ہاتھ دستانہ بکف پاؤں جرابوں والا

بائیں بازو پہ ٹکایا تھا جہاں سر اس نے
وہاں پہلے سے فرشتہ تھا عذابوں والا

اس کے میک اپ سے مجھے آتی ہے ہلدی کی مہک
دیگ حلوے کی مصالحہ ہے کبابوں والا

جیولری کی ہیں دکانیں اور خریدار بہت
اور بازار میں تنہا ہے کتابوں والا

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad