Type Here to Get Search Results !

Shayari 6 December Black day Babri Masjid

Views 0

Also Read

Unlimited Shayari Round Circle Logo


روحِ بابر کو کچھ نہیں ہوتا

قلب شناس''کو کچھ نہیں ہوتا


ہم جو حکم خدا پےکرتے عمل

چھ 6 دسمبر کو کچھ نہیں ہوتا

بابری مسجد

❁〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰❁

تم سمندر کی بات مت کرنا

تیر و خنجر کی بات مت کرنا


میری آنکھوں سے خون برسے گا

چھ دسمبر کی بات مت کرنا

❁〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰❁

‏جانے کیسی دہشت ہے جانے کیسا یہ ڈر ہے

ہیں' اداس تاریخیں اور چپ کلینڈر ہے 


میں نے دل سے جب پوچھا کیوں اداس منظر ہے

دل یہ چیخ کر بولا آج چھ 6 دسمبر ہے😭

❁〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰❁

تم نے بخشے ہیں جو آزار کہاں رکھوں گا

یہ گِرے گنبد و مینار کہاں رکھوں گا😭


اپنے بچوں سے ہر اک راز چھپا لونگا مگر

چھ دسمبر کا میں اخبار کہاں رکھوں گا😭

❁〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰〰❁


آہ اسے آباد نہ کرنے پہ وہ روٹھ گئی 

پھر غیروں کے ستم سہہ کر ٹوٹ گئی 


میں کیسے سناؤں غم بابری تیری مسجد کا 

وہ جگہ بھی مسلمانوں سے چھوٹ گئی 

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

AD Banner

Below Post Ad

AD Banner