Type Here to Get Search Results !

Hum garibo ka wo gham gusar aa gaya | Asas Iqbal

Views 0

یہ بھی پڑھیں

Hum garibo ka wo gham gusar aa gaya lyrics | Asas Iqbal | Urdu Naat

Hum Garibo ka woh Gamgusar Aa gaya lyrics in Urdu

Listen to the the audio file
Asad Iqbal Naat lyrics in Urdu
Hum Garibo ka woh Gamgusar Aa gaya


ہم غریبوں کا وہ غمگسار آ گیا
شـــاہکار آ گیا،  تـاجـــدار آ گیا
یعنی محبوب پروردگار آ گیا

پھول نے مسکرا کر چمن سے کہا
ہاں گگن سے کہا، ہاں مگن سے کہا
آج گلشن میں جـان بہار آ گیا

جس کے آگے جھُکے تاجداروں کے سر
ماہپاروں کے سر، ہاں ہزاروں کے سر
سب رسولوں کا وہ تاجدار آ گیا

جب کسی نے کہا تیرا سرور ہے کون
تیرا رہبر ہے کون، تیرا افسر ہے کون
لب پہ نامِ نبی ﷺ بار بار آ گیا

آنکھ پُرنم ہوئی دل مچلنے لگا
دل تڑپنے لگا دل سسکنے لگا
یاد جب بھی نبی کا مزار آ گیا

کفر غاروں میں منہ کو چھپانے لگا
ہاں چھپانے لگا ٹس مسانے لگا تلملانے لگا
دہر میں جب وہ ناقَہ سَوار آ گیا

جس طرف چل دیا وہ شہہ دیں ہشم
تاجدارِ حرم شہرِ یارِ ارم
نعمتیں بانٹتا بے شمار آ گیا

پھول کھلنے لگے، بھنورے گانے لگے
گنگنانے لگے، مسکرانے لگے
اے اسد کُل جہاں کا قرار آ گیا

اسدؔ اقبال

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad