Type Here to Get Search Results !

meharban hum pe jo taqdeer hamari hogi

Views 0

Also Read

Unlimited Shayari Thumbnail
مہرباں ہم پہ جو تقدیر ہماری ہوگی
آپ کی زلف گرہ گیر ہماری ہوگی

عمر بھر آپ ہی دیکھیں گے کوئی خواب طرب
لیکن اس خواب کی تعبیر ہماری ہوگی

آج کی رات ہے عرفان حجابات کی رات
آج ہر شمع میں تنویر ہماری ہوگی

آج پھر وصل کے اڑتے ہوئے لمحے سن لیں
وقت کے پاؤں میں زنجیر ہماری ہوگی

کچھ بھی ہو آپ کے ماحول کا معیار حیات
آپ کے ذہن میں تصویر ہماری ہوگی

تہمتوں سے ہمیں دے گا یہ جہاں داد وفا
اب اسی ڈھنگ سے توقیر ہماری ہوگی

ایک عنواں میں سمٹ آئیں گے سو نام قتیلؔ
داستاں جب کوئی تحریر ہماری ہوگی

قتیل شفائی

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

AD Banner

Below Post Ad

AD Banner