Type Here to Get Search Results !

Duniya mai jo Noor o Nikhat ke Irfan ki Khushboo faili hai | Zakir Ismaili

Views 0

Also Read

 
دنیا میں جو نور و نکہت کے عرفان کی خوشبو پھیلی ہے 
سرکار ﷺ تمہارے آنے سے ایمان کی خوشبو پھیلی ہے 

بوبکر یہ بولے لاؤں گا ایمان خدا پر وہ دیکھو
فاران سے میرے آقا ﷺ کے اعلان کی خوشبو پھیلی ہے

کعبے کے صنم توڑیں گے ہم بولے یہ صحابہ برجستہ
اب نامِ عمر میں آقا ﷺ کے دربان کی خوشبو پھیلی ہے

پاتے ہیں شِفا بیمار سبھی یثرب بھی مدینہ بنتا ہے
ایوب کے گھر میں جس دن سے مہمان کی خوشبو پھیلی ہے 

ہم عاشقِ اہلسنت کی رگ رگ میں طُفیلِ اختر سے
سلطانِ بریلی کے لطف و فیضان کی خوشبو پھیلی ہے 

شاہان زمانہ یوں ذاکِر آۓ بہت دنیا میں مگر
اِک ٹوٹی چٹائی پر بیٹھے سلطان کی خوشبو پھیلی ہے

 نعت خواں:- ذاکر اسماعیلی بہرائچی

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad