Type Here to Get Search Results !

Gausul Wara Ki Mehfil Jo Bhi Saja Rahe Hain Lyrics | Nadeem Raza Faizi

Views 0

Also Read

Gausul Wara Ki Mehfil Jo Bhi Saja Rahe Hain Lyrics | Nadeem Raza Faizi

Gausul Wara Ki Mehfil Jo Bhi Saja Rahe Hain Lyrics In Urdu

غوث الورٰی کی محفل جو بھی سجا رہے ہیں
سویا   ہوا   مقدر   اپنا  جگا   رہے  ہیں

بغداد  والے  آقا  کی  دیکھیے  کرامت
فرما کے قم باذنی مردے جلا رہے ہیں

فیض وکرم کا بادل چھایا ہوا ہے ہر سو
لگتا ہے غوثِ اعظم  تشریف لا رہے ہیں

پرانِ پیر  ہیں  وہ  روشن ضمیر  ہیں وہ
بیٹی کو  اک نظر میں  بیٹا  بنا رہے ہیں

دنیا بھی ان کی روشن عقبیٰ بھی ان کا روشن
جو بزمِ اولیاء کی محفل میں آ رہے ہیں

تم دیکھتے ہو جن کو ریتوں سے کھیلتے ہیں
در اصل وہ زمیں پر  جنت بنا رہے ہیں

وہ بارہ سالہ ڈوبی باراتیوں کی کشتی
سرکار  اعظم  دیکھو  تیرا  رہے  ہیں

اعلان  اب  سنا دو تم  اے ندیم فیضیؔ
بخشش کا شاہ جیلاں دریا بہا رہے ہیں

شاعر اسلام ندیم رضا فیضؔی

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad