Type Here to Get Search Results !

Nahi Bhula to Bas Aye Maa Tera Chehra nahi Bhula | Beautiful Nazm

Views 0

Also Read

Nahi Bhula to Bas Aye Maa Tera Chehra nahi Bhula | Beautiful Nazm | Maa ke Upper Khoobsurat Nazm

Nahi Bhula to Bas Aye Maa Tera Chehra nahi Bhula Lyrics

نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا
گزرتی زندگی کے ساتھ میں کیا کیا نہیں بھولا 

نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا 
میرے چھوٹے سے چھوٹے خواب کی تکمیل کی خاطر 
مصلے پر تیرا دامن کو پھیلانا نہیں بھولا

چَبا کر چُوس کر بچپن میں جو ماں نے کھلایا تھا
بڑھاپے تک وہی لذت بھرا لقمہ نہیں بھولا 
نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا

چھلک جاتی ہیں آنکھیں سر پہ جب بھی دھوپ پڑھتی ہے 
تیری ممتا بھرے آنچل کا میں سایہ نہیں بھولا
نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا
 
بہت آسائشیں ہیں مخملی  بستر ہیں سونے کو 
مگر اب بھی تیرے میں ہاتھ کا تکیہ نہیں بھولا
نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا

دسمبر کے مہینے میں  تیرا سردی کے موسم میں 
وہ منہ کے بھاپ سے ہاتھوں کو گرمانا نہیں بھولا 
نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا 

جو میرے خون میں شامل ہے میری زندگی بن کر 
میں دودھ کا اک اک قطرہ بھی نہیں بھولا 
نہیں بھولا تو بس اے ماں تیرا چہرہ نہیں بھولا

عنایت ہے خدا کی آج کل اے سی میں سوتا ہوں 
مگر اب بھی میں تیرے ہاتھ کا پنکھا نہیں بھولا
نہیں بھولا تو بس اےماں تیرا چہرہ نہیں بھولا

شاعر:- ن۔م
❁〰〰〰〰〰〰〰✰✰✰〰〰〰〰〰〰❁

Tags

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad