Type Here to Get Search Results !

Fida kar ishq Nabi par jaan lyrics

Views 0

یہ بھی پڑھیں

 Fida kar ishq Nabi par jaan lyrics

فدا کر عشقِ نبی پر جان مکمل کر لے تو ایمان
زمانہ یاد کرے گا

دن رات تڑپ یہ رہتی ، اے کاش مدینہ جاؤں میں
الطاف و کرم کی وادی سے تا عمر نہ واپس آؤں میں
میرے دل کا ہے یہی ارمان نچھاور کر دوں ان پر جان
زمانہ یاد کرے گا

جب یاد نبی کی آتی اکِ کیف کا عالم ہوتا ہے
جب ذکرِ نبی چھڑ جاتا ہے اک وجد کا موسم ہوتا ہے
یہی تو کہتا ہے قرآن کہ آقا ہیں جانِ ایمان
زمانہ یاد کرے گا

سرکار سے تو ہے دور مگر سرکار تو تجھ سے دور نہیں
کیوں کھویا کھویا رہتا ہے مختار ہے تو مجبور نہیں
نبی کو پہلے دل سے مان، نبی پر سب کچھ کر قربان
زمانہ یاد کرے گا

سرکار کے جلؤں سے روشن ایمان و عمل کی دنیا ہے
سرکار کے دیوانوں کے سدا تقلید زمانہ کرتا ہے
نبی کا دیکھ ذرا فیضان، کہ تازہ ہو جائے ایمان
زمانہ یاد کرے گا

اسلاف کی تاریخ یہی، ساحل پہ جلا دی ہے کشتی
دوڑائے ہیں گھوڑا دریا پر، کیا عشقِ نبی کی مستی تھی
تمہیں ہو وہ مردِ میدان، ذرا ڈھونڈھو اپنی پہچان
زمانہ یاد کرے گا

دربارِ ولایت کیا کہنا جب ان کا اشارہ ملتا ہے
برسوں کی ڈوبی کشتی کو ایک پل میں کنارہ ملتا ہے
اسد یہ غوث کا ہے فیضان جس سے فکر ونظر حیران
زمانہ یاد کرے گا

جو بات تھی اعلیٰ حضرت میں وہ آج کسی حضرت میں نہیں
وہ عشقِ نبی کے پیکر تھے، تھراتے تھے ان سے دشمن بھی
دیا ہم کو کنز الایمان یہ ہے ہم پر ان کا احسان
زمانہ یاد کرے گا

شاعرِ اسلام جناب اسد اقبال کلکتوی صاحب
✰✰✰

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad