Type Here to Get Search Results !

Shehre Nabi ki baat na pucho lyrics | Marhoom Sajjad Nizami

Views 0

Also Read

Shehre Nabi ki baat na pucho lyrics | Marhoom Sajjad Nizami

shehre nabi ki baat na pucho lyrics

شہرِ نبی کی بات نہ پوچھو رنگت ہی کچھ ایسی ہے
آتے ہیں جس جا روز ملائک نسبت ہی کچھ ایسی ہے

آتا ہے یوں حج کا مہینہ دل کو یوں تڑپاتا ہے
بہنے لگے ہیں آنکھ سے آنسو چاہت ہی کچھ ایسی ہے

چاند کو ٹکڑے کرکے دکھایا ڈوبا سورج واپس آیا
شاہ مدینہ کی انگلی میں طاقت ہی کچھ ایسی ہ

سن کے اے سجاد نظامی جھوم رہے ہیں دیوانے
نعتِ محمد صل علی میں لذت ہی کچھ ایسی ہے

مرحوم سجؔاد نظامی صاحب

Post a Comment

0 Comments

Top Post Ad

Below Post Ad